21

افغانستان میں 2 صدور نے بیک وقت حلف اٹھا لیا

کابل میں دو صدور نے بیک وقت حلف اٹھا لیا۔اشرف غنی اور عبداللہ عبداللہ نے بطور افغان صدر کے آج حلف اٹھایا،تفصیلات کے مطابق آج افغانستان کے نومنتخب صدر اشرف غنی نے اپنی تقریب حلف برداری مؤخر کر دی تھی۔صدارتی انتخابات حتمی نتائج کے اعلان سے قبل ہی متنازعہ ہو گئے تھے۔ انتخابات حتمی نتائج کے اعلان سے قبل ہی متنازعہ ہو گئے تھے۔
میڈیارپورٹس کے مطابق اشرف غنی کی کامیابی کا اعلان ملکی الیکشن کمیشن نے کیا لیکن سابق چیف ایگزیکٹو عبداللہ عبداللہ بھی صدارتی انتخابات میں کامیابی کا دعویٰ رکھتے ہیں۔ دونوں افغان سیاسی رہنما پیر کو صدر کا حلف اٹھانے کا اعلان کیے ہوئے تھے۔ اشرف غنی کی جانب سے حلف اٹھانے کو ملتوی کرنے کے بعد عبداللہ عبداللہ نے بھی اپنی حلف برداری کو مؤخر کر دیا تھا،تقریب حلف برداری تنازع کا شکار ہو گئی تھی۔
تاہم اب دونوں صدور نے بیک وقت حلف اٹھا لیا ہے۔ افغانستان میں آج اشرف غنی اور عبداللہ عبداللہ دونوں نے صدارتی حلف لیا۔اشرف غنی کے ساتھ ساتھ عبداللہ عبداللہ نے بھی افغانستان کے صدر کا حلف اٹھایا۔اشرف غنی نے ایوان صدر جب کہ عبداللہ عبداللہ نے کابل میں حلف اٹھایا۔اس سے قبل دونوں سیاسی رہنما کے درمیان امریکی ایلچی زلمے خلیل زاد نے مذاکراتی عمل سے تنازعے کو حل کرنے کی کوشش کی تھی۔
ہعبداللہ عبداللہ کو دوبارہ چیف ایگزیکٹو کا عہدہ دیئے جانے کا امکان بھی ظاہر کیا گیا تھا۔ یہ بات بھی قابل غور رہے 7 مارچ کو سابق لیڈرعبدل علی کی برسی کی تقریب پر فائرنگ کا واقعہ پیش آیا ، اسی دوران افغان حکومت کے چیف ایگزیکٹو عبداللہ عبداللہ اور سابق افغان صدر حامد کرزئی بھی تقریب میں شریک تھے۔تاہم دونوں محفوظ رہے تھے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں