17

ٹیلی کام اور آئی ٹی کے شعبوں میں براہ راست بیرونی سرمایہ کاری میں نمایاں اضاف

اسلام آباد (11 دسمبر2019ء) ٹیلی کمیونیکیشن اور انفارمیشن ٹیکنالوجی کے شعبہ جات میں براہ راست بیرونی سرمایہ کاری میں جاری مالی سال کے دوران نمایاں اضافہ ریکارڈ کیا گیا ہے۔ سرمایہ کاری بورڈ اور سٹیٹ بینک آف پاکستان کے اعداد و شمار کے مطابق جاری مالی سال کے ابتدائی چار ماہ میں انفارمیشن ٹیکنالوجی اور ٹیلی کمیونیکیشن کے شعبوں میں براہ راست غیر ملکی سرمایہ کاری کا حجم 278.1 ملین ڈالر سے تجاوز کرگیا ہے۔
گزشتہ مالی سال میں اس شعبے میں براہ راست بیرونی سرمایہ کاری کا حجم 55.7 ملین ڈالر ریکارڈ کیاگیا۔ مالی سال 2017-18ء، مالی سال 2016-17 ء اور مالی سال 2015-16ء کے دوران ان شعبہ جات میں براہ راست غیر ملکی سرمایہ کاری کا حجم بالترتیب 113، 41.9 اور 246.8 ملین ڈالر رہا تھا۔
اعداد وشمار کے مطابق جاری مالی سال کے دوران ٹیلی کمیونیکیشن کے شعبہ میں غیر ملکی سرمایہ کاری کا حجم 267.3 ملین ڈالر ریکارڈ کیا گیا۔

انفارمیشن ٹیکنالوجی کے شعبہ میں براہ راست غیر ملکی سرمایہ کاری کا حجم 10.8 ملین ڈالر رہا۔ ان میں سافٹ ویئر ڈویلپمنٹ کے شعبہ میں6.5 اور آئی ٹی خدمات کے شعبہ میں براہ راست غیر ملکی سرمایہ کاری کا حجم 3.9 ملین ڈالر ریکارڈ کیا گیا۔ سرمایہ کاری بورڈ کے حکام کے مطابق آنے والے مہینوں میں ان شعبہ جات میں مزید غیر ملکی سرمایہ کاری متوقع ہے۔ انفارمیشن ٹیکنالوجی اور ٹیلی کمیونیکیشن ان شعبہ جات میں شامل ہے جہاں سب سے زیادہ براہ راست غیر ملکی سرمایہ کاری ہو رہی ہے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں