15

یوکرائنی طیارے کوغلطی سے نشانہ بنانے والوں کیخلاف کارروائی کی جائے گی

یوکرائن طیارہ حادثے کو نشانہ بنانا کبھی نہ بھولنے والی غلطی تھی۔ ایرانی صدر حسن روحانی نے کہا ہے کہ یوکرائن کے طیارہ کو غلطی سے نشانہ بنا یا گیا۔ طیارے کو نشانہ بنانے والے افراد کیخلاف سخت کارروائی کی جائے گی، حسن روحانی نے سماجی رابطے کی ویب سائٹ پر گفتگو کرتے ہوئے کہا ہے کہ ایک انسانی غلطی کے باعث یوکرائن کا طیار تباہ ہوا جس میں 176 معصوم افراد جاں بحق ہوگئے۔
اس نا بھولنے والی غلطی اور سانحہ کی تحقیقات جاری ہیں ۔
واضح رہے کچھ دیر قبل ایران نے یوکرائنی طیارے کوغیر ارادی طور پرمار گرانے کا اعتراف کیا تھا ۔ ایرانی فوج نے غلطی سے یوکرائنی طیارے کو نشانہ بنایا، طیارے کو نشانہ بنانا “انسانی غلطی” ہے۔

ایران نے یوکرائنی طیارے کو مار گرانے کی غلطی کو تسلیم کر لیا ہے۔ ایرانی سرکاری ٹی وی نے فوج کا حوالہ دیتے ہوئے تسلیم کر لیا ہے کہ ان کی فوج نے غلطی سے یوکرائنی طیارے کو مار گرایا تھا۔

ایرانی وزیر خارجہ جواد ظریف کا ٹوئیٹر پیغام میں کہا واقعے پر افسوس اور متاثرہ خاندانوں سے معذرت چاہتے ہیں۔ ایرانی وزیر خارجہ نے افسوس کا اظہار کرتے ہوئے بتایا تھا کہ آرمی کی جانب سے تحقیقات کے ابتدائی نتائج سامنے آئے ہیں۔ ان کا کہنا ہے کہ امریکی مہم جوئی کے سبب پیدا ہونے والے بحران کی وجہ سے طیارہ انسانی غلطی کا شکار ہوا۔انہوں نے متاثرہ خاندانوں کے ساتھ افسوس کا اظہار کرتے ہوئے معذرت بھی کی ہے۔ مزید تفصیلات کے مطابق ایرانی حکام نے یہ تسلیم کر لیا ہے کہ ان کی فوج نے غلطی سے یوکرائن کے مسافر طیارے کو نشانہ بنایا۔

اپنا تبصرہ بھیجیں